تُرکی کے صدر طیب اردگان کو بڑا دھچکا: استنبول اور انقرہ کے الیکشن میں شکست

0
507

اتوار کا دن تُرکی کے مشہور صدر کی سیاست میں ایک بُرا دن ثابت ہوا جب سولہ سالہ تاریخ میں تُرکی کے دارالحکومت انقرہ میں اُنکی پارٹی کو لوکل الیکشنز میں شکست کاُمنہ دیکھنا پڑا، اور اپوزیشن جماعت کے اُمیدوار میئر مُنتخب ہو گئے۔ یاد رہے تُرکی میں صدارتی الیکشنز کیبعد لوکل باڈیز الیکشنز کی بہت اہمیت ہے اور یہی نتائج آئیندہ صدارتی  الیکشنز کا رُخ متعین کرتے ہیں۔

انقرہ کی شکست اردگان حکُومت کیلیے کسی سانحے سے کم نہیں، مُسلسل الیکشن جلسے اور میڈیا پر موجودگی کے باوجود طیب ارگان اپنی جماعت کو انقرہ میں شکست سے ناں بچا سکے۔
دُوسرا دھچکا تُرکی کے سب سے بڑے شہر استنبول میں بھی شکست کی صورت میں نکل سکتا ہے کیونکہ وہاں بھی شکست کے بادل مُسلسل منڈلا رہے ہیں۔

لیکن پورے الیکشن میں طیب اردگان کی پارٹی نے اپوزیشن سے زیادہ ووٹ لیے ہیں، لیکن انقرہ اور استنبول میں شکست تُرکی کے آئیندہ صدارتی الیکشن میں حکُومتی پارٹی کی شکست کا پیش خیمہ ہو سکتی ہے۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here