یوم دفاع کی تقریب کمزور سکرپٹ اور پھیکی میزبانی کی نظر ہو گئی

0
633

یوم دفاع کی تقریب کمزور سکرپٹ اور پھیکی میزبانی کی نظر ہو گئی

چیف آف آرمی سٹاف کی تقریر مُختصر اور مٌدلل تھی، سب نے سراہا

وزیر اعظم پاکستان کی تقریر فی البدیہہ مُتاثر کُن لیکن طوالت آڑے آ گئی

آرمی بینڈ کی پرفارمنس نہایت مٌتاثر کُن تھی

نور جہان کی گائے ہوئے اے پُتر ہٹاں تے نئیں وکدے، راہ حق کے شہیدو گائے جاتے

جواد احمد کے مشہور گانے ‘دوستی’ کی ویڈیو دکھائی جاتی

راحت فتح علیخان کے گانے نے شُروع میں سماع باندھ دیا

فلمی کلپس کی طوالت کُچھ زیادہ تھی لیکن پروڈکشن کوالٹی کمال تھی

ساحر علی بگا آئمہ بیگ بالکل مس فٹ تھے
تقریب کا اختتام عاطف کے گانے سے کرنا بھی زیادتی تھی
کل پاکستان نے ایک نئے جوش و ولولے کیساتھ 6 ستمبر کا تاریخی دن منایا۔ تمام دن شہداء کی قبروں پر پاکستانیوں کی حاضری کا سلسلہ جاری رہا۔ کل کا سب سے بڑا فنکشن اسلام آباد میں ہوا جسکے مہمان خصوصی وزیر اعظم پاکستان عمران خان تھے اور ہوسٹ چیف آف آرمی سٹاف تھے۔ پروگرام کے انتظامات آئی ایس پی آر کے پاس تھے اور اتنا بڑا ایونٹ سنبھالنا کوئی آسان کام نہیں تھا۔
چھ ستمبر کے دن کی اہمیت کو دیکھتے ہوئے دیکھا جائے تو پروگرام کا کری ایٹو اور سکرپٹ بہت کمزور تھا۔ جس نے بھی سکرپٹ لکھا اُس نے شاید تقریب میں آئے مہمانان کو اپنی بریف میں نہیں رکھا۔
ہوسٹ نہایت کمزور تھے جن کو لکھا ہوا سکرپٹ پڑھنا پڑھ رہا تھا۔ اداکار اداکار ہوتے ہیں ناں کے اینکرز۔
ہمیں اچھے چہروں کی بجائے اچھے سکرپٹ اور اچھے اینکر کی ضرورت تھی، انور مقصود، توثیق حیدر، سدرہ اقبال، نُور الحسن اس طرح کی تقریبات کیلیے موزوں انتخاب ہو سکتے تھے لیکن اُنکو مُسلسل نظر انداز کیا گیا۔
 
موسیقی میں بھی ترنم ناز، ثُریا خانُم، تصور خانُم،
 
نور جہان کی گائے ہوئے اے پُتر ہٹاں تے نئیں وکدے، راہ حق کے شہیدو گائے جاتے
 
جواد احمد کا مشہور گانے کی ویڈیو دکھائی جاتی
 

ساحر علی بگا آئمہ بیگ بالکل مس فٹ تھے

 

تقریب کا اختتام عاطف کے گانے سے کرنا بھی زیادتی تھی

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here